53

نیوزی لینڈ میں کھلاڑیوں کا کورونا ٹیسٹ مثبت آنا شرمندگی کا باعث ہے، وسیم اکرم

کراچی: قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان وسیم اکرم نے کہا ہے کہ نیوزی لینڈ میں کھلاڑیوں کا کورونا ٹیسٹ مثبت آنا شرمندگی کا باعث ہے۔

کراچی میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے وسیم اکرم نے کہا کہ نیوزی لینڈ پہنچنے کے بعد کھلاڑیوں کا کورونا ٹیسٹ مثبت آنا شرمندگی کا باعث بنا ہے، نیوزی لینڈ کورونا فری ملک ہے، پی سی بی کو نیوزی لینڈ روانگی سے پہلے تمام حفاظتی اقدامات کرنے چاہیے تھے، انہیں چاہیے تھا کہ کرکٹرز کو زیادہ وقت کے لیے پاکستان میں آئسولیشن میں رکھتے۔

وسیم اکرم نے مزید کہا کہ پاکستانی کرکٹرز نیوزی لینڈ میں تنہائی کا شکار اور اذیت میں مبتلا ہیں، کھلاڑیوں کی ہمت ہے کہ وہ ڈھائی ہفتے سے ایک کمرے میں قید ہیں۔ ذہنی دباؤ کا شکار ہونے کی وجہ سے کھلاڑیوں کی کارکردگی متاثر ہوگی۔وسیم اکرم نے کہا کہ کراچی کی سمندری آلودگی کو اجاگر کرنا میرا ذاتی ایجنڈا نہیں، ساحل اور شہر کو گندگی سے پاک کرنا سیاستدانوں کی ذمہ داری ہے، شہر قائد کا رہائشی ہونے کے ناطے اس کے مسائل سامنے لانا میری ذمہ داری ہے۔

لاہور میں خاتون کی جانب سے بابر اعظم پر لگائے گئے الزام پر وسیم اکرم نے کہا کہ بابراعظم قومی کپتان اور بہترین بیٹسمین ہے، کراچی: بابر اعظم پر لگائے جانے والے الزامات سے متعلق حقائق سامنے آئے تو اظہار کیا جا سکتا ہے۔